in

تحریر ، تاج محمد تاج ۔۔ ایک طرف سیاحت کو فروغ کرنا اور دوسری طرف لوگو کو دونو …

تحریر ، تاج محمد تاج ۔۔
ایک طرف سیاحت کو فروغ کرنا اور دوسری طرف لوگو کو دونو ہاتھو سے لوٹنا یہ ھے انصاف کے حکومت کا دعویٰ. آج مجھے اپنے کچھ مہمانوں کے ساتھ ملم جبہ جانے کا پروگرام بنا جب ھم نے منگلور کو کراس کیا اور ملم جبے کا روڈ شروع ھوہا تو میں نے اس اقدام کو بہت سراہا کے یہ حکومت کی بہت اچھا قدم ہے کہ اس نے بہت پیارا اور آرام دہ روڈ بنایا ہے اس سے یہاں کے سیاحت کو بہت فروغ ملے گا کیونکہ بہت سے لوگ اس خراب روڈ کی وجہ سے ملم جبہ جنت نظیر جیسے وادی کو دیکھنے سے محروم ہو جاتے تھے. آخر کار ہم بہت سکون کے ساتھ اپنے ڈیسٹینیشن ملم جبہ پہنج گئے . پہلی تو وہاں ہمیں گاڈی پارک کرنی میں بہت دشورای کا سامنا کرنا پڑھا. آخر کار ہم نے بہت مشکل سے اپنی گاڈی کو ایک کلومیٹر واپس ھوکے روڈ سائیڈ پہ کھڑی کی اور پیدل چلنے لگے. جب وھاں پہنچے تو بہت سارے لوگ وہاں پر موجود تھے لیکن اندر جا نہیں سکتے تھے میں نے ایک بندے سے پوچھا یہ لوگ اندر سکی پوائنٹ پہ کیو نہیں جاتھے تو اس نے مجھے کہا کہ ہم تو اندر جانےکیلے اہے ہے لیکن یہ لوگ 300 روپے لیتے ہیں تب اندر چھوڑ دیتے ہیں تو میں یہ سن کر دنگ رہ گیا آور کاونٹر پہ چلا گیا وہاں میں نے کاونٹر والے سے پوچھا ٹکٹ کس حساب سے ہے تو صاحب نے بغیر توجہ دیتے ہوئے کہا خالی اندر جانے پر 300 روپے فیس ہے اور چیر لفٹ پہ جانے کا 600 روپے اور زف لائن پر جانے کا 2500روپے فیس ھے تو میں نے کہا یہ تو بہت ذیادہ ہے تو صاحب کہنے لگے یہ تو ابھی نارمل ریٹ ہے کیونکہ ابھی فل سیزن نہیں ہے بعد میں ہم اس ریٹ کو بڑھائنگے. خیر میرے مہمان بہت دور سے آئے تھے تو میں نےمجبورن چار ٹکٹ لئیے 2400 روپے دیئے اور اندر جانے لگے جب اندر گئے تو دیکھ لیا کہ اندر لوگ نہ ھونے کے برابر تھے. اور چیر لفٹ پر بھی اکھا دوکھا لوگ جاتے تھے باقی سارے چیر لفٹ خالی تھی.اور زف لائن میں تو بالکل سناٹا چھا گیا تھا. کہنے کا مقصد یہ ہے کہ کیا اس سے سیاحت کو فروغ ملے گا یا الٹا بیڑہ غرق ہوجائے گا. لوگ دن بر کے ٹینشن اور مہنگائی سے تنگ آکر کچھ وقت تفریح کے لیے نکالتے ہیں لیکن وہاں بھی لوگو کو دونو ہاتھوں سے لوٹ لئیے جاتے ھے. اگر یہ فیس مناسب ہوتے تو بہت سارے لوگ خوشی کیساتھ خرید سکتے تھے اور اپنے دن بر کے ٹینشن کو کچھ ٹائم کیلئے ختم کرسکتے تھے لیکن کیا کرے عام آدمی کے نصیب میں ایسا ہونا ناممکن ہے اور ھر جگہ خوار ہوکر واپس اپنی اس ٹینشن زدہ زندگی میں اتھے ہے. میں منسٹری آف ٹوریزم چیف منسٹراور عمران خان سے التجائیں کرتا ہوں کہ خدارا ان لوگوں کے حال پر رحم کرے اور یہ سیاحت جو آپ بہت بڑے دعوے کرتے ہو فروغ کرنے کیلئے اس کو الٹا تباہ و برباد نہ کریں اور فیس مناسب کرے. شکریہ………………

Writing, Taj Muhammad Taj
On one hand promoting tourism and on the other hand looting people with both hands is the claim of justice government. Today I had a program to go to MLM JABBA with some of my guests when we crossed Mangalore and the road of MLM JABBA started, I appreciated the move that it was a great step by the government that it was very lovely and relaxing The road has been built, it will boost the tourism here a lot because many people missed to see the valley like MLM Jabba Jannat Nazeer due to this bad road. Finally we reached our destination MLM Jabba very peacefully. First of all, we had to face a lot of trouble in the car park there. At last we took our car back one kilometer and parked on the road side and started walking. When I got there, many people were there but couldn't go inside. I asked a guy why don't they go to the ski point. He said to me that we are about to go inside but these people 300 When they take the rupees and leave it inside, I was stunned to hear this and went to the counter. I asked the counter owner on what account is the ticket. Sir said without paying attention, 300 rupees fee for going inside empty. There is 600 Rupees to go to the chair lift and 2500 Rupees to go to the Zuff line. So I said this is too much. So sir said this is a normal rate now because it is not full season later. We will increase this rate. Well, my guests came from far away, so I forced them to take four tickets and paid 2400 rupees and started going inside, when they went inside, they found that there were no people inside. And people used to go on the chair lift, the rest of the chairs were empty. And there was absolutely silence in the Zuff line. The purpose of saying is whether it will promote tourism or will it be destroyed in reverse. People take some time out for fun after being tired of tension and inflation, but there also people are robbed with both hands. If these fees were appropriate, many people could have bought with happiness and could have eliminated the tension of their day for some time, but what to do, it is impossible to happen in the fate of a common man and return to this stressful life after being humiliated everywhere. I am here. I request the Ministry of Tourism Chief Minister and Imran Khan to have mercy on these people and don't destroy the tourism which you make a big claim to promote and make the fees fair. Thank you………………

Translated


Written by Swat Valley

What do you think?

122 Points
Upvote Downvote

Comments

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

GIPHY App Key not set. Please check settings

    Loading…

    0
    Image may contain: tree, sky, mountain, snow, outdoor and nature

    Malam Jabba, Swat

    © Trekking Swat Valley “Over every mountain there is a path, although it may n…